میانوالی نیوز


<a href=”http://www.dailyfunds.net/?ref=qaiserthethia&#8221;

<div id=”fb-root”></div>
<script>(function(d, s, id) {
var js, fjs = d.getElementsByTagName(s)[0];
if (d.getElementById(id)) return;
js = d.createElement(s); js.id = id;
js.src = “//connect.facebook.net/en_US/all.js#xfbml=1”;
fjs.parentNode.insertBefore(js, fjs);
}(document, ‘script’, ‘facebook-jssdk’));</script>
Six suspected Afghan nationals have been arrested in Mianwali because of their failure to prove identification.
The suspects have been arrested at a checkpost in Chashma and are said to be Afghan nationals.
According to police, the foreigners were arrested when they were trying to enter Punjab through the Chasma Barrage. The arrested Afghans lack the required travelling documents.
Police have filed a case against them under the Foreigners Ac

MIANWALI: Five of a family were killed for honour at Wandha Karak village in
the Makarwal police limits on Friday night.

According to the police, 25-year-old Farzana Bibi, mother of three children, eloped with her lover and went to Lahore. Mayatullah, her father, and Asmatullah, her husband, brought her back four days ago. However, Mayatullah did not reconcile with her. Asmatullah with his cousins Attaullah and Muzaffarullah entered her house and opened indiscriminate fire at the family with kalashnikovs. As a result, Farzana Bibi, her father Mayatullah, mother Gul Saira, sisters 18-year-old Hukam Zada and 16-year-old Rakham Zada died on the spot. On Saturday, the victims were buried in a local village.

The police have registered a case on the complaint Naurang Khan, maternal uncle of Farzana Bibi. SHO Muhammad Afzal Gunjial said that the deceased Farzana Bibi and her husband were cousins. He added that Mayatullah’s accomplices were also her cousins.

میانوالی (نمائندہ میانولی نیوز) مسلم لیگ ن کی پالیسیاں ہی ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کر سکتی ہیں ،عدلیہ کی بحالی کا حلف اٹھایا تو اسے بحال کر کے بھی دکھایا ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ ن شادیہ کے صدر محمد صفدر حیات بھٹی اور جنرل سیکرٹری میاں نصراللہ ناصر نے شادیہ میں صحافیوں سے گفتگو میں کیا ۔انہوں نے کہا بابر اعوان جیسے کردارہر تاریخ کا مکروہ ترین حصہ رہے ہیں ۔انہوں نے کہا سستی روٹی پر تنقید کرنے والے برگر فیملی ٹائپ لوگ غریبوں کے اصل مسائل جانتے تک نہیں انہوں نے کہا کہ پنجاب سب کے لیے اس لحاظ سے نمونہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن مخلص لوگوں کو ہمیشہ سے سپورٹ کرتی رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام میںگھپلے کیے جا رہے ہیں ۔۔۔
واں بھچراں(نمائندہ خصوصی) میانوالی پکہ گھنجیر میں جعلی نوٹوں کی بھرمار ۔بینکوں کی بند گڈیوں میں بھی جعلی نوٹ آنے لگے ۔کاروبار سے وابسطہ افراد کے ساتھ ساتھ عام افراد بھی لٹنے لگے ۔تفصیلات کے مطابق میانوالی،واں بھچراں ،پکہ گھنجیرہ اور گردو نواح کے دیہاتوں میں جعلی کرنسی کی بھرمار ہوگئی ہے حد تو یہ ہے کہ بینکوں کی بند گڈیوں میں بھی جعلی نوٹ آنے لگے ہیں ۔زیادہ تر جعلی نوٹ سو روپے اور بیس روپے کے نئے نوٹوں میں ہیں ۔میانوالی کے ایک معروف تاجر نے بتایا کہ اے ٹی ایم مشین کے ذریعے بھی جعلی نوٹ بھی آ جاتے ہیں اور اگر احتجاج کیا جائے تو بینک اہلکا رسیخ پا ہو جاتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ بعض اوقات تو نوٹ چیک کرنے والی مشین بھی نوٹ نہیں پہجان سکتی ۔م تاجروں اور دکانداروں کی اکثریت نے کہا کہ نئے کرنسی نوٹوں میں جتنے زیادہ سکیورٹی فیچر بنائے گئے ہیں جعلسازوں نے اتنی ہی زیادہ مہارت حاصل کر لی ہے ۔اشتیاق احمد،عبدالمجید اور سمیع اللہ نے گورنر سٹیٹ بینک اور وزارت داخلہ سے مطالبہ کیا ہے کہ جعلی کرنسی کاکام کرنے اور بنانے کی سزائوں میں اضافے کے ساتھ ساتھ جعلی نوٹوں کی شناخت کی مشینیں مفت دی جائیں ۔

میانوالی (نمائندہ خصوصی) بجلی کی قیمتوں میں من مانا اضافہ قبول نہیں کریں گے ۔لوڈشیڈنگ ختم کرنے کی بجائے عوام پر بجلی بم گرایا جا رہا ہے ان خیالات کا اظہار سابق ناظم ملک محمد عظیم کندی نے مظفرپور میں ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب میں کیا انہوں نے کہا کہ مسلسل مہنگائی سے خود کشیوں میں اضافہ ہو رہا ہے لیکن حکمران ریلیف دینے کے بجائے ظلم کی انتہا کر رہے ہیں انہوں نے کہا کہ اگر یہی حال رہا تو لوگ سول نا فرمانی کی تحریک پر مجبور ہو جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ حقائق سے آنکھیں چرانے والے حکومتی وزیر اور بیوروکریٹ اس لاوے کا اندازہ نہیں کر رہے جو لوگوں کے دلوں میں ان کے خلاف پک رہا ہے ۔انہوں نے کہا مراعات یافتہ طبقہ غریبوں کا خون پی رہاہے اور پھر بھی بھوکا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پٹرولیم مصنوعات اور بجلی پر لگائے گئے تمام ٹیکس معاف کیے جائیں ۔

میانوالی (نمائندہ خصوصی) نوراکشتی کرنے والے گورنر پنجاب اور رانا ثناء اللہ جیسے لوگوں کو تاریخ معاف نہیں کرے گی ان دونوں کو عہدوں سے ہٹا دینا چاہیے ۔پیپلز پارٹی کو فوزیہ وہاب اور بابر اعوان جیسے لوگ ناقابل تلافی نقصان پہنچا رہے ہیں ان خیالات کا اظہار سیاسی و سماجی کارکن فیض محمد انصاری نے صحافیوں سے گفتگو میں کیا انہوں نے کہا کہ ن لیگ کی نرم پالیسی کی وجہ سے پیپلز پارٹی نے فائدہ اٹھایا ہے لیکن اندرونی طور پر کئی فیصلے پیپلزپارٹی کیلئے نقصان دہ ثابت ہوئے۔انہوں نے کہا کہ بھٹو اور زرداری کی پیپلز پارٹی میں دن اور رات کا فرق ہے ۔انہوں نے کہا کہ شہباز شریف بھی بھاگ بھاگ کے تھک گئے ہیں اور ان کی ٹیم بھی پورا کام نہیں کر رہی ۔انہوں نے کہا دہشت گردی کا حل ہماری خارجہ پالیسی میں ہے ۔اگر خارجہ پالیسی میںفوری تبدیلی کر کے پارلیمان کے اند اور باہر کی قیادت نے ٹھوس فیصلے نہ کیے تو آئندہ کئی محاذوں پر مشکلات کا شکار ہو سکتے ہیں ۔انہوں نے کہا بحرانوں پر قابو پانے کی بجائے حکومت کو دیگر مسائل سے فرصت ہی نہیں ۔انہوں نے کہا کہ وقت آگیا ہے کہ کڑوا گھونٹ ایک ہی بار پیا جائے ۔
واں بھچراں(نمائندہ خصوصی) میانوالی کو سرائیکی وسیب کا حصہ بنایا جائے ۔ہمارے حقوق غصب کرنے والے زیادہ دیر تک ایوانوں میں نہیں رہیں گے ان خیالات کا اظہار سرائیکی بزرگ شخصیت روشن ملک نے اخبارنویسوں سے خصوصی گفتگومیں کیا انہوں نے کہا کہ ہمیں ہر بار ذہنی اذیتیں دی گئیں لیکن ہم نے اس کا ڈٹ کر مقابلہ کیا انہوں نے پیپلز پارٹی کی قیادت سے مطالبہ کیا کہ سرحد کا نام تبدیل ہو سکتا ہے تو سرائیکی صوبہ کیوں نہیں بن سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہمیں کبھی شمالی پنجاب اور کبھی جنوبی پنجاب میںتقسیم کرکے ذاتی مفاد کے لیی استعما ل کیا گیا تو کبھی سرحد میں شامل کرنے کی دھمکی دی گئی انہوں نے سرائیکی وسیب کے رہنمائوں کو یقین دلایا کہ وہ میانوالی کے پلیٹ فارم سے سرائیکی تحریک کو تقویت دیں گے ۔
میانوالی (نمائندہ خصوصی)سانحہ داتا دربار کے خلاف مظفرپور اورپکہ گھنجیرہ میں مظاہرے ۔ملزموں کو سخت سزا دینے اور ماسٹر مائنڈ کو بے نقاب کرنے کا مطالبہ ۔سانحہ داتا دربار کے خلاف مظفرپور اورپکہ گھنجیرہ میں مظاہرے کیے گئے مظاہرین نے پلے کا رڈ اٹھا رکھے تھے جن پر ،مساجدمیں بم دھماکے کرنے والے مسلمان نہیں، زائرین کے قاتلوں کو پھانسی دو، کے نعرے درج تھے ۔ مظاہرین سے مرکزی جمیعت علمائے پاکستان کے رہنما ملک احمد خان بھچر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بر صغیرکے عظیم صوفی حضرت داتا گنج بخش کے دربار پر ہونے والے دھماکوں کے پیچھے گھنائونی سازش ہے ۔انہوں نے کہا کہ زائرین اور بے گناہ لوگوں کوشہید کرنے والے نہ تو مسلمان ہیں اور نہ ہی ان کا اسلام سے تعلق ہے ۔انہوں نے کہا کہ واقعہ میں ملوث گھنائونے اور مکروہ چہروں کو بے نقاب کرنا حکومتی ذمہ داری ہے ۔انہوں نے کہا کہ اب وقت آگیا ہے کہ ہمیں کڑے اور مشکل فیصلے کر لینے چاہئیں۔انہوں نے کہا کہ ہمیں بھی اپنی ذمہ داری ادا کرتے ہوئے ایسے عناصر کو بے نقاب کرنا ہوگا اور اپنے اردگرد کے حالات کا مشاہدہ کرنا ہوگا۔انہوں نے کہا کہ ہمیں پولیس اور قانون نافذکرنے والے اداروں تک صحیح معلومات پہنچانا ہوں گی ۔انہوں نے کہا کہ اس واقعہ پر پوری قوم سوگوار ہے ۔انہوں نے کہا کہ لاہور جیسے حساس شہر میں دہشت گردی کی لگاتار کاروائیاںپولیس اور حساس اداروں کے لیے چیلنج ہیں ۔انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ واقعہ میں ملوث اصل ملزمان اور ماسٹر مائنڈکو بے نقاب کرنے کے لیے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں اور دیگر درباروں کی سکیورٹی کے لیے از سر نو پلان بنایا جائے ۔ آخر میں داتا دربار میں شہید ہونے والے افراد کیلئے دعا کرائی گئی ۔
میانوالی(قیصر اقبال ٹھیٹھیہ سے ) اعوان ویلفیئر ٹرسٹ اور اقرا ویلفیئر ٹرسٹ کلری کے زیر اہتمام گذشتہ روز ایک تقریب کا انعقاد ہوا جس میںمعززین علاقہ کی کثیر تعدادنے شرکت کی ۔تقریب میں بن گروڑہ،ڈھوک شیرنے خیل،ڈھوک نمبردار والی کی سڑک کے لیے ایک کروڑ فنڈ کی منظوری اور بجلی کی5 سکیموں کے لیے کروڑوں روپے فنڈ منظور کرنے پر ملک عماد خان کا شکریہ ادا کیا گیا ۔تقریب میں ڈھوک محمود ،ڈھوک سکے خیل کے لیے پانی کا مسئلے کے حل کے لیئے ملک عماد خان کی توجہ دلائی گئی ۔ تقریب سے ملک انصار اور ڈاکٹر حمیداللہ ملک نے خطاب کرتے ہوئے ملک عماد خان پر بھرپور اعتماد کا اظہار کیا اور کہا کہ ملک عماد نے جس طرح اپنے ووٹروں سے رابطہ رکھا ہوا ہے ان کی کامیابی کو کوئی نہیں روک سکتا ۔ ملک انصار نے کہا کہ علاقائی ترقی کے لیے ملک عماد ذاتی دلچسپی لے کر کام کرارہے ہیں ۔
میانوالی(قیصر اقبال ٹھیٹھیہ سے ) پکہ گھنجیرہ سڑکیں ٹوٹ پھوٹ کا شکا ر ،صفائی کا مناسب انتظام نہ ہونے سے مچھربیماریاںپیدا کرنے لگے ،گلیاں گندے جوہڑوں میں تبدیل ہو گئیں ۔سیوریج نہ ہونے سے گندا پانی گھروں میں داخل ہو جاتا ہے۔ ایکسپریس سروے میں محمد اقبال گھنجیرہ،دوست محمد،فضل الرحمن ،جاوید اقبال،محمد حاکم اروڑی خیل،محمد اسلم محمد رمضان اور محمد خان نے کہا کہ تعلیم ہر ایک کے لیے کا دعویٰ کرنے والی حکومت یہاں لڑکیوں کے لیے گرلز ہائی سکول قائم نہ کر سکی بچیوں کو کئی کلومیٹر کا فصلہ طے کر کے جانا پڑتا ہے ۔ محکمہ صحت کے پا س اتنی رقم نہیں کہ وہ ایک ڈسپنسری ہی بنا دے۔ وو ٹ لے کر جانے والوں نے اس علاقہ سے منہ پھیر رکھا ہے اور اپنے ووٹروں سے ہاتھ ملانا پسند نہیں کرتے ۔ اس علاقہ میں نہری پانی کی کمی کی وجہ سے سونا اگلنے والی زمینیں بنجر ہو رہی ہیں ۔ گلیوں کا گندا پانی گھروں میں داخل ہو جاتا ہے لیکن انتظامیہ کوئی اقدامات نہیں اٹھا رہی۔ غربت اور بے روزگاری کی وجہ سے جرائم اور خود کشیوں میں بھی روز بروز اضافہ ہو رہا ہے ۔ اس جدید دورمیں بھی پکہ گھنجیرہ کے ڈیرہ جات اور نواحی آبادیاں بجلی جیسی سہولت سے محروم ہیں۔واں بھچراں اور پکہ گھنجیرہ کا اکلوتا رورل ہیلتھ سنٹر کی حالت قابل رحم ہے ۔ہسپتال کی حالت دیکھ کر لگتا ہے کہ یہ آثار قدیمہ کی بلڈنگ ہے۔ ہسپتال میں سہولیات نہ ہونے کی وجہ سے لوگ دردرکی ٹھوکریں کھانے پر مجبور ہیں۔ پکہ گھنجیرہ میں کھیل کا میدان نہ ہونے کی وجہ سے بچے گلیوں اور چوکوں میں کرکٹ کھیلنے پر مجبور ہیں یہاں کھیل کے میدان کے لیے اراضی الات کی جائے ۔نوجوان نسل کا کتاب سے رشتہ بحال کرنے کیلئے پبلک لائبریری کا مطالبہ بھی زور پکڑ رہا ہے ۔ پکہ گھنجیرہ کی اسی فی صد آبادی زراعت اورمال مویشی پالنے سے منسلک ہے لیکن یہاں وٹرنری سنٹر نہیںبنایا جا سکا۔ یونین کونسل واں بھچراں کی آبادی بہت زیادہ ہے اس لیے اسے دو حصوں میں تقسیم کرکے پکہ گھنجیرہ کو علیحدہ یونین کونسل کا درجہ دیا جائے۔ سوئی گیس کے بار بار وعدے کرنے والوں نے آج تک پکہ گھنجیرہ کو بھلا رکھا ہے۔شہریوں نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے مطالبہ کیا کہ وہ خود ہی اس علاقے کے لیے فنڈز جاری کریں اور اسے پکہ گھنجیرہ کے دیرینہ مسائل کے حل کے لیے ڈی سی او میانوالی کو ہدایات جاری کی جائیں ۔
میانوالی (ملک قیصر ٹھیٹھیہ سے ) جو نا انصافی کرے گا اس کی گردن توڑ دیں گے ۔پرچی جوا ،منشیات کے مگر مچھوں کو پکڑا جائے گا ۔ ان خیالات کا اظہار آر پی او ارگودھا میاں جاوید اسلام نے واں بھچراں میں کھلی کچجری سے خطاب کر تے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ تھانہ کلچر تبدیل ہو رہا ہے ۔انہوں نے کہاکہ لوگ اور پولیس مل کر دہشت گردوں اور جرائم کا خاتمہ کر سکتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ تھانوں میں شریف آدمی کو عزت دی جائے گی اور ٹائوٹوں کو فارغ کیا جائے گا ۔انہوں نے کہا کہ تھانہ واں بھچراں کو شہر سے باہر شفٹ کرنے کے لیے اقدامات کیے جا رہے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اس مٹی کا قرض چکانے کا وقت آ گیا ہے ۔اانہوں نے کہا کہ چور کو چوہدری بنانے کا وقت گزر گیا ہے اب ایسا نہیں ہو گا ۔۔انہوں نے کہا کہ پولیس میں موجود خرابیاں روز بروز کم ہو رہی ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ واں بھچراں میں جرائم کی شرح کم ہے اور اب تک 159مقدمات رجسٹر ہوئے ہیں جن میں 5یا 6قتل اور2ڈاکے کے ہیں ۔ ا نہوں نے اس موقع پر کئی درخواستوں پر فوری احکامات جاری کیے اور ڈی پی او میانوالی اور ایس ایچ او تھانہ واں بھچراں کو ہدایات دیں ۔
میانوالی (ملک قیصر ٹھیٹھیہ سے ) آرپی او کی کھلی کچہری کے لیے لگائے گئے ٹینٹ جھکڑ اور آندھی نے اکھیڑ دیے جس کی وجہ سے تقریب 1گھنٹہ سے زائد لیٹ ہوگئی ۔سکیورٹی کے انتہائی سخت اقدامات کیے گئے تھے ۔صحافیوں نے کالی پٹیاں باندھ کر تقریب کی کوریج کی اور آر پی او کو میانوالی کے صحافیوں سے ہونے والی زیادتی سے آگاہ کیا ۔خواتین کو بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کا جھانسا دے کر بلایا گیا۔زیادہ تر تنازعات جائیداد اور لین دین کے تھے ۔تقریب کے بعد ریفرشمنٹ میں بد نظمی کی وجہ سے برتن ٹوٹ گئے ۔خواتین کے بیٹھنے کا انتظام نہ تھا انہیں زمین پر بٹھایا گیا تھا جس پر انہوں نے احتجاج بھی کیا لیکن انہیں کرسیاں نہیں دی گئیں ۔ لوگوں نے شکایات کے انبار لگا دیے ۔تقریب میں متعدد سینئر پولیس عہدیداران اور ایس ایچ اوز نے شرکت کی ۔پرویزمشرف نامی شخص شکایت کے لیے آیا تو تقریب کشت زعفران بن گئی ۔تقریب میں ن لیگ کے رہنما ملک احمد خان اور سابق ناظمین نے بھی شرکت کی ۔مصالحتی کمیٹی کے ارکان اور چیئرمین بھی موجود تھے ۔تقریب میں بجلی چلی گئی۔پرانا بازار میں جوئے اور شراب نوشی کے اڈے کی شکایت پر ایس ایچ او کو پسینہ آ گیا ۔شکایت کنندگان میں محمد ریاض،محمد خان ،محمد سلطان،رب نواز،محمد نذر،محمد،غلام محمد،پرویزمشرف،مشتاق احمد،غلام رسول سلطان خیل ،غلام مرتضیٰ ،محمد زمان،احمد ،آصف محمود خان اور کئی خواتین بھی شامل تھیں ۔سلطان خیل سے اغوا ہونے والی لڑکی مصباح رسول کے والد غلام رسول نے تھانہ مکروال کے رویہ کے خلاف شکایت کی ۔
میانوالی ( قیصر اقبال ٹھیٹھیہ ) تھانہ واں بھچراں کی حدودمیں دو خودکشیاں مجموعی طور پر ایک ہی روز چار افرادہلاک ۔
تفصیلات کے مطابق پکہ گھنجیرہ کے رہائشی 55سالہ عبدالخالق نے خارش کی بیماری سے تنگ آکر پھندا لے کر خود کشی کر لی اسے کے چار بیٹے اور ایک بیٹی ہے ۔ ڈیرہ درکھانوالہ کے محمد امیر درکھان نے غربت سے تنگ آ کے گندم کی گولیاں کھاکر زندگی کا خاتمہ کر لیا جبکہ گھریلو تنازعہ پر سید رسول نے اپنی سگی بہن اٹھارہ سالہ صفیہ کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا ۔
ایک اور واقعہ میں وٹو پل کے نزدیک نامعلوم افراد نے رحمت خٹک کو فائر مار کر دلہ برانچ میں نعش پھینک دی اور اس کے ساتھی ماجد ولد وکٹر مسیح کو فائرنگ کر زخمی کر دیا ۔ابھی تک نعش نہیں نکالی جا سکی ۔موقع پر موجود کار سے شراب کی بھاری مقدار بھی برآمد ہوئی ہے تاہم پولیس نے تصدیق سے انکار کر دیا ہے ۔

میانوالی ( سٹاف رپورٹر)کراچی میں بم دھماکوں کے بعد میانوالی میں سکیورٹی ہائی الرٹ کر دی گئی ۔ چہلم کے جلوسوں اور مجالس کی سکیورٹی میںبھی اضافہ کیا گیا۔ صوبہ سرحد سے ملنے والی چیک پوسٹوں پر پولیس اور رینجرز کے جوانوں کو سخت چیکنگ کرنے کی ہدایات کی گئی ہیں ۔ میانوالی کے حساس مقامات پر سادہ کپڑوں میں اہلکار تعینات کیے گئے جبکہ گاڑیوں کی بھی سخت تلاشی لی جا رہی ہے۔
کراچی دھماکوں کے بعد میانوالی کی اہم چیک پوسٹ قدر ت آباد پر اہلکاروں کی تعداد میں غیر معمولی اضافہ کر دیا گیا ۔کراچی کے ھالات کو جان بوجھ کر خراب کیا جا رہا ہے ۔ حکومت نے فوری نوٹس نہ لیا تو آگ پورے ملک میں پھیل سکتی ہے ان خیالات کا اظہار مسلم لیگی رہنما ملک احمد خان بھچر نے ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب میں کیا انہوں نے کہا کہ شر پسند عناصر ملک میں انارکی پھیلانا چاہتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ کراچی میں موجود پارٹیاں آپس میں ایک دوسرے پر کیچڑ اچھالنے کی بجائے حقیقت پسندی کا ثبوت دیں اور لوگوں کو تحفظ کا احساس دلائیں ۔ انہوں نے کہا کہ کراچی میں لگی آگ کو بجھایا نہ گیا تو یہ آگ دوسرے علاقوں کی طرف بڑھ سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کراچی کی صورتحال سے فائدہ اٹھانے والے شر پسند کون ہیں ان کا پتہ چلانا ضروری ہے ۔

 

میانوالی (ملک قیصر اقبال ٹھیٹھیہ سے)وزیر اعلی پنجاب میاں شہباز شریف نے اپنی توجہ تعلیم پر مرکوز کر رکھی ہے ۔سابقہ دور میں پڑھا لکھا پنجاب کا نعرہ لگانے والے وزیر اعلیٰ نے تعلیم کا کا ستیا ناس کر دیا تھا ۔سابقہ دور میں شعبہ تعلیم میں انتہا کی کرپشن تھی ۔ موجودہ حکومت نے اساتذہ کی عزت نفس بحال کی ان خیالت کا اظہار ممبر صوبائی اسمبلی ملک فیروز جوئیہ نے پپلاں میں اساتذہ کو انعامات کے چیک دینے کی تقریب سے خطاب میں کیا انہوں نے کہا کہ ہرنولی موڑ کے نزدیک دانش پبلک سکول منصوبے کا آغاز بہت جلد ہو گا ۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے کمپیوٹر لیبز،کھیلوں کے فروغ،غیر نصابی سرگرمیوں ،پوزیشن ہولڈرز اور اساتذہ میں کروڑوں روپے کی گرانٹس دی ہیں ۔ای ڈی او ایجوکیشن ملک محمد اسلم نے تقریب سے خطاب میں کہا کہ اساتذہ معاشرے کی بہتری کے لیے اپنا کردار ادا کریں ۔بعد میں اساتذہ او ر استانیوں میں 78لاکھ روپے کے انعامی چیک تقسیم کیے گئے ۔پوزیشن ہولڈر طلبا و طالبات میں بھی میڈل اور انعام تقسیم کیے گئے ۔ تقریب میں اس وقت دلچسپ صورتحال پیدا ہو گئی جب ایک طالب علم کا والد سٹیج پر پہنچ گیا اور اس نے اپنے بچے کی سند دکھائی اور کہا کہ اس کے بیٹے نے ضلع بھر میں اول پوزیشن حاصل کی ہے انتظامیہ نے اس کا موئقف مان لیا اور اس کے بیٹے زیشان اقبال کو بھی ایک ہزار انعام دیا گیا۔تقریب میں سینکڑوں اساتذہ ۔ای ڈی او ہیلتھ ۔ایم ایس ڈی ایچ کیو ڈاکٹر شیر علی خان نے خصوصی طور پر شرکت کی۔

 

میانوالی ملک قیصر اقبال ٹھیٹھیہ سے بھائیوں کے تشدد سے تنگ زنجیروں میں جکڑی اٹھارہ سالہ سفینہ تھانہ واں بھچراں پہنچ گئی ۔بھائی فروخت کرنا چاہتے ہیں ۔ میں نے انکار کیا تو تشدد کا نشانہ بنایا ۔ بھائیوں کے خلاف قانونی کاروائی کی جائے ۔
تفصیلات کے مطابق واں بھچراں کے محلہ مطلوب آباد کی رہائشی اٹھارہ سالہ سفینہ بی بی دختر وزیر کی پہلی شادی فتخ خان ولد احمد خان بھچر ساکن شادیہ سے ہوئی لیکن فتخ خان نے طلاق دے دی بعد ازاں سفینہ کی شادی فضل الرحمن ولد محمد خان پٹھان سکنہ گولے والی سے ہوئی ۔ بھائیوں نے اس شادی کو ناکام بنا دیا اور سفینہ کو گھر بٹھا دیا۔ اب سفینہ کو آگے فروخت کرنے کا پروگرام بنیا گیا لیکن اس نے انکار کر دیا جس پر اسے تشدد کا نشانہ بنایا گیا اور بھائیوں نے اپنی ماں امیر خاتوں کو دھمکی دے کر سفینہ کو بڑے زنجیر کے ساتھ چارپائی کے ساتھ باندھ دیا ۔ سفینہ نے چارپائی کو جلا کر زنجیر کا سرا نکال لیا اور چادر اوڑھ کر صھافیوں کے ہمراہ تھانہ واں بھچراں پہنچ گئی ۔ سفینہ بی بی نے اپنا بیان ریکارڈ کراتے ہوئے کہا کہ اس کے بھائی مجید اور حنیف اسے قتل کرنا چاہتے ہیں کیونکہ میں نے فروخت ہونے سے انکا ر کر دیا تھا ۔اس نے بتایا کہ اس کی ماں کی جان کو بھی خطرہ ہے۔ اس نے کہا کہ اس کی چھ بہنیں ہیں اور وہ سب سے چھوٹی ہیں ۔ اس نے بتایا کہ اس کی بہنوں کو بھی فروخت کیا گیا تھا۔ اس نے اپنے وکیل عمران سہیل مہراجی سے فون پر بات کی اور کہا کہ وہ دارالامان جانا چاہتی ہیں ۔عمران سہیل نے کہا کہ ملزمان کے خلاف سخت قانونی کاروائی کی جائے بعد میں پولیس سفینہ کو زنجیروں سمیت میانوالی لے گئی ۔
تھانہ واں بھچراں نے ابھی تک مقدمہ درج نہیں کیا ہے
زنجیروں میں جکڑی سفینہ بی بی کو دارالامان بھجوا دیا گیا ہے ۔ ایکسپریس نیوز پرخبر کے نشرہوتے ہی میانوالی کے صحافی ضلع کچہری میں سفینہ کے وکیل عمران سہیل مہراجی اور انسانی حقوق کے وکیل خلیل الرحمان خان کے چیمبر میں پہنچ گئے ۔ تاہم انہیں اس وقت سخت مایوسی اور حیرانی کا سامنا کرنا پڑا جب سفینہ وہان پہنچی تو اس کو زنجیریں نہیں لگی ہوئی تھیں اور راستے میں اس کی زنجیریں کھلوا دی گئی تھیں۔
پکہ گھنجیرہ (نمائندہ ایکسپریس) انسانی حقوق کے وکیل خلیل الرحمن خان نے کہا کہ آج بھی عورت کے حقوق کو غصب کیا جا رہا ہے انہوں نے کہاکہ عورتوں کے حقوق کے لیے قانونی جنگ لڑتے رہیں گے ۔انہوں نے کہا کہ سفینہ کی ہر طرح کی قانونی مدد کی جائے گی۔
سفینہ کے سابق وکیل عمران سہیل نے کہا کہ سفینہ پر تشدد کرنے والوں کو قانون کے کتہرے میں لایا جائے گا ۔
تھانہ واں بھچراں نے ابھی تک سفینہ کی درخواست پر کوئی قانونی کاروائی نہیں کی اور نہ ہی کوئی مقدمہ درج کیا ہے ۔ چندروز پہلے سفینہ کی والدہ امیر فاطمہ بھی اپنے بیٹوں کے خلاف درخواست دے چکی ہےلیکن اس پر کاروائی نہیں کی گئی ۔

 

 

 

 

 

 

 

پولیس نے میانوالی سے سات دہشتگردوں کو گرفتار کرکے ان سے دھماکہ خیز مواد برآمد کرلیا:
پولیس نے ضلع میانوالی سے سات دہشتگردوں کو گرفتار کرکے ان سے دھماکہ خیز مواد برآمد کرلیا ہے گرفتار ملزمان کے گروہ کے خود کش حملہ آوروں نے ڈیرہ غازی خان میں کھوسہ مارکیٹ اور چکوال میں امام بار گاہ کو دھماکہ خیز مواد سے اڑایا ہے دوران تفتیش انکشاف ہوئے ہیں۔ان خیالات کااظہار ریجنل پولیس آفیسر سرگودھا میاں جاوید اسلام نے پیر کی سہ پہر اپنے آفس میں ایک پرہجوم پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ ضلع میانوالی میں گرفتار ہونے والے مبینہ دشتگردوں عمران، سجاد اختر ،شیرزمان،امان اللہ،محمد امجد، محبوب اور عرفان سے جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم نے تفتیش کی اور رپورٹ حکومت کو بھجوادی ہے آر پی او نے بتایاکہ گروہ کاتعلق کالعدم تنظیموں سے ہے اور ان کا نیٹ ورک علاقہ غیر سے ہے اور ان سے 409 کلو گرام ایک خود کش جیکٹ،کلاشنکوف ایک عدد اورڈیٹونیٹنگ کارڈ16کلوگرام برآمدکئے ہیں اور ملزمان ڈی پی او میانوالی کے دفتر ،سکھر، اسلام آباد، راولپنڈی میں امام بار گاہوں ،جلوسوں اورمجالس پر خود کش حملے کی منصوبہ بندی کررہے تھے آر پی او میاں جاوید اسلام نے بتایا کہ دیگر مزید ملزمان کی گرفتاری کیلئے چھاپہ مار ٹیمیں تشکیل دیدی ہیں اور چھاپے مارے جارہے ہیں مزید گرفتاریوں کاامکان ہے انہوں نے بتایاکہ حکومت نے ان کی گرفتاری پر ساڑھے تین لاکھ روپے ملازمان کو انعام دیا ہے۔

 

 

 

 

 

 

 

ملک قیصر اقبال ٹھیٹھیہ سے پنجاب کے دوسرے علاقوں کی طرح میانوالی میں بھی بجلی کے طویل بریک ڈاﺅن کے بعد بجلی جزوی طور پر بحال ہو گئی ہے تاہم بعض علاقوں میں ابھی بھی بجلی بحال نہ ہو سکی ۔بجلی کے بریک ڈاﺅن کی وجہ سے موبائل فونز تک نے کام کرنا چھوڑ دیا تھا جبکہ نواحی علاقوں میں واٹر سپلائی بند ہونے سے لوگ پینے کے پانی سے بھی محروم ہو گئے یونین کونسل موسٰی خیل کے نواحی علاقوں کے مکین کئی کئی کلومیٹر کا فاصلہ طے کر کے پینے کا پانی لاتے رہے ۔ مساجد میں وضو تک کا پانی نہ تھا ۔اہلیان میانوالی نے واپڈا میں بڑھتی ہوئی بد انتظامی پر شدید احتجاج کرتے ہوئے وزیراعظم یوسف رضا گیلانی سے مطالبہ کیا کہ کہ بجلی کے بحران پر قابو پانے کے لیے کل جماعتی گول میز کانفرنس فوری بلائی جائے اور ایسے منصوبے ہنگامی بنیادوں پر شروع کیے جائیں جن سے بجلی کے جاری بحران پر قابو پایا جا سکے۔
دریں اثنا میانوالی کے دیہاتی علاقوں میں بدستور غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔ کئی فیڈرز پر تو ہر آدھا گھنٹہ بعد ایک گھنٹہ بجلی بند کر دی جاتی ہے۔ لوڈشیڈنگ سے صارفین سمیت واپڈا کے میٹر ریڈر بھی تنگ ہیں کیونکہ نئے ڈیجیٹل میٹرز بجلی نہ ہونے کی صورت میں ریڈنگ شو نہیں کرتے اور انہیں بار بار چکر لگانے پڑتے ہیں۔

میانوالی سٹاف رپورٹر آخر جیت ہمارا مقدر بنے گی۔عوام کی اکثریت مسلم لیگ ن کی پالیسیوں کی حمایت کرتی ہے۔ ان خیالات کا اظہارمسلم لیگ ن میانوالی کے صدر ساجد خان نے یونین کونسل شادیہ میں مسلم لیگ ن کے سیکرٹری جنرل میاں نصراللہ کے گھر ایک جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ میاں نواز شریف ہی وہ واحد لیڈر ہیں جنہوں نے پاکستان کے مفاد کی بات کی ۔انہوںنے کہا کہ آنے والا وقت بتائے گا کہ ہماری پارٹی نے موجودہ حکومت کو قائم رکھنے میں کتنی قربانیاں دی ہیں ۔میاں نصراللہ ناصر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میانوالی مسلم لیگ ن کا قلعہ ثابت ہو گا اور یہاں پر کاغذی حکومت کرنے کے خواب دیکھنے والے مایوس ہو ں گے ۔ اس موقع پر کارکنوں نے میاں نواز شریف کی پالیسیوں پر اعتماد کی قرارداد بھی متفقہ طور پر منظور کی۔



 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

میانوالی قیصر ٹھیٹھیہ سے سال 2009میں ضلع میانولی میں 110افراد قتل ہوئے جن میں ایک درجن خواتین بھی شامل ہیں سال2009کا پہلا قتل تھانہ موسیٰ خیل کے علاقہ میں خاوند کے ہاتھوں بیوی کا قتل تھا جبکہ آخری قتل تھانہ داﺅدخیل کی حدودو میں صفدر نامی شخص کا ہوا۔حادثات کے دوران ہلاک ہونے والوں کی تعداد 35رہی۔گذشتہ سال کی سب سے بڑی دہشت گرد کاروائی 7فروری کو ہوئی جس میں دہشت گردوں نے قدرت آباد چیک پوسٹ کو دھماکے سے اڑا دیا تھا جس میں آٹھ پولیس اہلکار شہید ہوئے جبکہ گزشہ سال ہی 19بچے نہر مہاجر برانچ میں ویگن گرنے کی وجہ سے ڈوب کر جاں بحق ہوئے تھے۔تھانہ پپلاں کی حدود میں ایک لرزہ خیز واردات میں تاجر وحید صدیقی کی بیوی نسرین بی بی اور اس کے دو بیٹوں بارہ سالہ محمد آصف اور آٹھ سالہ محمد حماد کو انتہائی بے دردی سے قتل کیا گیا تھا۔ اغوا برائے تاوان کی چار وارداتیں رونما ہوئیں ۔ چشمہ بیراج سے ایک درجن سے زائد نعشیں بھی ملیں جن کی شناخت نہ ہو سکی ۔
میانوالی پویس نے سال کی آخری سہ ماہی میں دہشت گردی کی وارداتوں میں مطلوب کئی افراد کو گرفتار بھی کیا اور میانوالی پولیس کی کارکردگی مجموعی طور پر تسلی بخش رہی۔
میانوالی قیصر ٹھیٹھیہ سے پکہ گھنجیرہ،واں بھچراں اور میانوالی کے نواحی علاقوں میں ہلکی بوندا باندی سے موسم خوشگوار ہو گیا محکمہ زراعت کے مطابق بوندا باندی سے چنے کی فصل پر اچھے اثرات مرتب ہو ں گے۔ سردی میں اضافے کی وجہ سے ایندھن کی قیمتیں بھی بڑھ گئی ہیں ۔
میانوالی قیصر ٹھیٹھیہ سے 31دسمبر تک لوڈ شیڈنگ ختم کرنے کے تمام تر حکومتی دعوے ٹھس ۔دیہاتی فیڈرز پر اب بھی اٹھارہ سے بیس گھنٹے کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے ۔لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے کاروبار زندگی ٹھپ ہو کر رہ گیا ہے میانوالی میں تحریک انصاف ۔ مسلم لیگ ن سمیت تاجر تنظیمیں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ کی وجہ سے سراپا احتجاج بنی ہوئے ہیں ۔

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

 

داﺅدخیل(ذوالفقارخان )نامعلوم افراد نے سینتالیس سالہ صفدر کو فائرنگ کر کے قتل کر دیا۔تفصیلات کے مطابق داﺅدخیل کے محلہ شریف خیل نمبر دو کے رہائشی غلام صفدرخان شریف خیل کے گھر رات تقریبا بارہ بجے تین نا معلوم افراد نے دستک دی۔ متوفی نے دروازہ کھولا تو تین نامعلوم افراد نے متوفی پر فائرنگ کر دی۔ جس کے نتیجے میں وہ موقع پر جاں بحق ہو گیا۔ پولیس تھانہ داﺅدخیل نے تین نا معلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔تاحال کوئی گرفتاری عمل میںنہیںآئی ۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
داﺅدخیل (ذوالفقارخان ) داﺅدخیل کے نواحی قصبہ سوانس کا رہائشی پاک آرمی کا نوجوان محمد خان نے آپریشن راہ راست کے دوران مہمند ایجنسی میں گزشتہ روز شہید ہوگئے۔ ان کی نماز جنازہ ان کے آبائی گاﺅں سوانس میں ادا کی گئی جس میں پاک آرمی کے اعلیٰ افسران سمیت سینکڑوںافراد نے شرکت کی۔بعدازاں شہید

%d bloggers like this: